رواة الحدیث

نتائج
نتیجہ مطلوبہ تلاش لفظ / الفاظ: بهز اسد العمي 1973
کتاب/کتب میں: صحیح بخاری
7 رزلٹ جن میں تمام الفاظ آئے ہیں۔
رواۃ الحدیث: انس بن مالك الانصاري ( 720 ) ، هشام بن زيد الانصاري ( 8046 ) ، شعبة بن الحجاج العتكي ( 3795 ) ، بهز بن اسد العمي ( 1973 ) ، يعقوب بن إبراهيم العبدي ( 8514 ) ، حدیث ۔۔۔ ہم سے یعقوب بن ابراہیم بن کثیر نے بیان کیا ، کہا ہم سے بہز بن اسد نے بیان کیا ، کہا ہم سے شعبہ نے بیان کیا ، کہا کہ مجھے ہشام بن زید نے خبر دی ، کہا کہ میں نے انس بن مالک ؓ سے سنا انہوں نے کہا کہ انصار کی ایک عورت نبی کریم ﷺ کی خدمت میں حاضر ہوئیں ۔ ان کے ساتھ ایک ان کا بچہ بھی تھا ۔ آپ ﷺ نے ان سے کلام کیا پھر فرمایا : اس ذات کی قسم ! جس کے ہاتھ میں میری جان ہے ۔ تم لوگ مجھے سب سے زیادہ محبوب ہو دو مرتبہ آپ ﷺ نے یہ جملہ فرمایا ۔ ... حدیث متعلقہ ابواب: انصاریوں سے محمد صلی اللہ علیہ وسلم کی چاہت کا اظہار ۔
Terms matched: 4  -  Score: 344  -  3k
رواۃ الحدیث: ابو ايوب الانصاري ( 2650 ) ، موسى بن طلحة القرشي ( 7744 ) ، عثمان بن عبد الله التميمي ( 5537 ) ، عمرو بن عثمان القرشي ( 6166 ) ، شعبة بن الحجاج العتكي ( 3795 ) ، بهز بن اسد العمي ( 1973 ) ، عبد الرحمن بن بشر العبدي ( 4321 ) ، حدیث ۔۔۔ (دوسری سند) امام بخاری رحمہ اللہ نے کہا کہ مجھ سے عبدالرحمٰن بن بشر نے بیان کیا ، ان سے بہز بن اسد بصریٰ نے بیان کیا ، ان سے شعبہ نے بیان کیا ، ان سے ابن عثمان بن عبداللہ بن موہب اور ان کے والد عثمان بن عبداللہ نے بیان کیا کہ انہوں نے موسیٰ بن طلحہ سے سنا اور انہوں نے ابوایوب انصاری ؓ سے کہ ایک صاحب نے کہا : یا رسول اللہ ! کوئی ایسا عمل بتائیں جو مجھے جنت میں لے جائے ۔ اس پر لوگوں نے کہا کہ اسے کیا ہو گیا ہے ، اسے کیا ہو گیا ہے ۔ نبی کریم ﷺ نے فرمایا کہ کیوں ہو کیا گیا ہے ؟ اجی اس کو ضرورت ہے بیچارہ اس لیے پوچھتا ہے ۔ اس کے بعد آپ ﷺ نے ان سے فرمایا کہ اللہ کی عبادت کر اور اس کے ساتھ کسی اور کو شریک نہ کر ، نماز قائم کر ، زکوٰۃ دیتے رہو اور صلہ رحمی کرتے رہو ۔ (بس یہ اعمال تجھ کو جنت میں لے جائیں گے) چل اب نکیل چھوڑ دے ۔ راوی نے کہا شاید اس وقت نبی کریم ﷺ اپنی اونٹنی پر سوار تھے ۔
Terms matched: 4  -  Score: 344  -  4k
رواۃ الحدیث: عبد الله بن مالك بن بحينة ( 5038 ) ، حفص بن عاصم العدوي ( 2428 ) ، سعد بن إبراهيم القرشي ( 3236 ) ، حماد بن سلمة البصري ( 2492 ) ، عبد الله بن مالك بن بحينة ( 5038 ) ، حفص بن عاصم العدوي ( 2428 ) ، سعد بن إبراهيم القرشي ( 3236 ) ، ابن إسحاق القرشي ( 6811 ) ، شعبة بن الحجاج العتكي ( 3795 ) ، معاذ بن معاذ العنبري ( 7561 ) ، محمد بن جعفر الهذلي ( 6904 ) ، عبد الله بن مالك بن بحينة ( 5038 ) ، حفص بن عاصم العدوي ( 2428 ) ، سعد بن إبراهيم القرشي ( 3236 ) ، شعبة بن الحجاج العتكي ( 3795 ) ، بهز بن اسد العمي ( 1973 ) ، عبد الرحمن بن بشر العبدي ( 4321 ) ، عبد الله بن مالك بن بحينة ( 5038 ) ، حفص بن عاصم العدوي ( 2428 ) ، سعد بن إبراهيم القرشي ( 3236 ) ، إبراهيم بن سعد الزهري ( 823 ) ، عبد العزيز بن عبد الله الاويسي ( 4581 ) ، حدیث ۔۔۔ ہم سے عبدالعزیز بن عبداللہ نے بیان کیا ، کہا کہ ہم سے ابراہیم بن سعد نے اپنے باپ سعد بن ابراہیم سے بیان کیا ، انہوں نے حفص بن عاصم سے ، انہوں نے عبداللہ بن مالک بن بحینہ سے ، کہا کہ نبی کریم ﷺ کا گزر ایک شخص پر ہوا (دوسری سند) امام بخاری رحمہ اللہ نے کہا کہ مجھ سے عبدالرحمٰن بن بشر نے بیان کیا ، کہا کہ ہم سے بہز بن اسد نے بیان کیا ۔ کہا کہ ہم سے شعبہ نے بیان کیا ، کہا کہ مجھے سعد بن ابراہیم نے خبر دی ، کہا کہ میں نے حفص بن عاصم سے سنا ، کہا کہ میں نے قبیلہ ازد کے ایک صاحب سے جن کا نام مالک بن بحینہ ؓ تھا ، سنا کہ رسول اللہ ﷺ کی نظر ایک ایسے نمازی پر پڑی جو تکبیر کے بعد دو رکعت نماز پڑھ رہا تھا ۔ نبی کریم ﷺ جب نماز سے فارغ ہو گئے تو لوگ اس شخص کے اردگرد جمع ہو گئے اور نبی کریم ﷺ نے فرمایا کیا صبح کی چار رکعتیں پڑھتا ہے ؟ کیا صبح کی چار رکعتیں ہو گئیں ؟ اس حدیث کی متابعت غندر اور معاذ نے شعبہ سے کی ہے جو مالک سے روایت کرتے ہیں ۔ ابن اسحاق نے سعد سے ، انہوں نے حفص سے ، وہ عبداللہ بن بحینہ سے اور حماد نے کہا کہ ہمیں سعد نے حفص کے واسطہ سے خبر دی اور وہ مالک کے واسطہ سے ۔ ... حدیث متعلقہ ابواب: بعد اقامت فرض کے علاوہ کوئی نماز نہیں ۔
Terms matched: 4  -  Score: 344  -  6k
رواۃ الحدیث: شعبة بن الحجاج العتكي ( 3795 ) ، عبد الصمد بن عبد الوارث التميمي ( 4548 ) ، بهز بن اسد العمي ( 1973 ) ، عبد الملك بن عمرو القيسي ( 5231 ) ، محمد بن جعفر الهذلي ( 6904 ) ، انس بن مالك الانصاري ( 720 ) ، عبيد الله بن ابي بكر الانصاري ( 5360 ) ، شعبة بن الحجاج العتكي ( 3795 ) ، عبد الملك بن إبراهيم الجدي ( 5198 ) ، وهب بن جرير الازدي ( 8169 ) ، عبد الله بن منير المروزي ( 5109 ) ، حدیث ۔۔۔ ہم سے عبداللہ بن منیر نے بیان کیا ، کہا ہم نے وہب بن جریر اور عبدالملک بن ابراہیم سے سنا ، انہوں نے بیان کیا کہ ہم سے شعبہ نے بیان کیا ، ان سے عبداللہ بن ابی بکر بن انس نے اور ن سے انس ؓ نے بیان کیا کہ رسول اللہ ﷺ سے کبیرہ گناہوں کے متعلق پوچھا گیا تو آپ ﷺ نے فرمایا ” اللہ کے ساتھ کسی کو شریک ٹھہرانا ، ماں باپ کی نافرمانی کرنا ، کسی کی جان لینا اور جھوٹی گواہی دینا ۔ “ اس روایت کی متابعت غندر ، ابوعامر ، بہز اور عبدالصمد نے شعبہ سے کی ہے ۔
Terms matched: 4  -  Score: 292  -  3k
رواۃ الحدیث: شعبة بن الحجاج العتكي ( 3795 ) ، عبد الملك بن إبراهيم الجدي ( 5198 ) ، بهز بن اسد العمي ( 1973 ) ، يزيد بن هارون الواسطي ( 8488 ) ، عائشة بنت ابي بكر الصديق ( 4049 ) ، ابو سلمة بن عبد الرحمن الزهري ( 4903 ) ، عبد الله بن حفص القرشي ( 4776 ) ، شعبة بن الحجاج العتكي ( 3795 ) ، عبد الصمد بن عبد الوارث التميمي ( 4548 ) ، عبد الله بن محمد الجعفي ( 5060 ) ، حدیث ۔۔۔ ہم سے عبداللہ بن محمد نے حدیث بیان کی ، انہوں نے کہا کہ ہم سے عبدالصمد نے ، انہوں نے کہا ہم سے شعبہ نے ، انہوں نے کہا ہم سے ابوبکر بن حفص نے ، انہوں نے کہا کہ میں نے ابوسلمہ سے یہ حدیث سنی کہ میں (ابوسلمہ) اور عائشہ ؓ کے بھائی عائشہ ؓ کی خدمت میں گئے ۔ ان کے بھائی نے نبی کریم ﷺ کے غسل کے بارے میں سوال کیا ۔ تو آپ نے صاع جیسا ایک برتن منگوایا ۔ پھر غسل کیا اور اپنے اوپر پانی بہایا ۔ اس وقت ہمارے درمیان اور ان کے درمیان پردہ حائل تھا ۔ ابوعبداللہ (امام بخاری رحمہ اللہ) کہتے ہیں کہ یزید بن ہارون ، بہز اور جدی نے شعبہ سے قدر صاع کے الفاظ روایت کئے ہیں ۔ (نوٹ : صاع کے اندر 2.488 کلو گرام ہوتا ہے ۔) ... حدیث متعلقہ ابواب: کم سے کم ایک صاع پانی سے غسل کرنا ۔
Terms matched: 4  -  Score: 292  -  4k
رواۃ الحدیث: عبد الله بن الحارث الهاشمي ( 4688 ) ، يزيد بن حميد الضبعي ( 8408 ) ، همام بن يحيى العوذي ( 8097 ) ، بهز بن اسد العمي ( 1973 ) ، احمد بن سعيد الدارمي ( 446 ) ، حكيم بن حزام القرشي ( 2468 ) ، عبد الله بن الحارث الهاشمي ( 4688 ) ، صالح بن ابي مريم الضبعي ( 3857 ) ، قتادة بن دعامة السدوسي ( 6458 ) ، همام بن يحيى العوذي ( 8097 ) ، حفص بن عمر الازدي ( 2438 ) ، حدیث ۔۔۔ ہم سے حفص بن عمر نے بیان کیا ، کہا کہ ہم سے ہمام نے بیان کیا ، ان سے قتادہ نے ، ان سے ابوالخلیل نے ، ان سے عبداللہ بن حارث نے اور ان سے حکیم بن حزام ؓ نے کہ رسول اللہ ﷺ نے فرمایا ، بیچنے اور خریدنے والوں کو جب تک وہ جدا نہ ہوں (معاملہ کو باقی رکھنے یا توڑ دینے کا) اختیار ہوتا ہے ۔ احمد نے یہ زیادتی کی کہ ہم سے بہز نے بیان کیا کہ ہمام نے بیان کیا کہ میں نے اس کا ذکر ابوالتیاح کے سامنے کیا تو انہوں نے بتلایا کہ جب عبداللہ بن حارث نے یہ حدیث بیان کی تھی ، تو میں بھی اس وقت ابوالخلیل کے ساتھ موجود تھا ۔ ... حدیث متعلقہ ابواب: جدا ہونے سے قبل بیع ختم کر سکتے ہیں ۔
Terms matched: 4  -  Score: 288  -  4k
رواۃ الحدیث: ابو ايوب الانصاري ( 2650 ) ، موسى بن طلحة القرشي ( 7744 ) ، عثمان بن عبد الله التميمي ( 5537 ) ، عمرو بن عثمان القرشي ( 6166 ) ، شعبة بن الحجاج العتكي ( 3795 ) ، بهز بن اسد العمي ( 1973 ) ، ابو ايوب الانصاري ( 2650 ) ، موسى بن طلحة القرشي ( 7744 ) ، عمرو بن عثمان القرشي ( 6166 ) ، شعبة بن الحجاج العتكي ( 3795 ) ، حفص بن عمر الازدي ( 2438 ) ، حدیث ۔۔۔ ہم سے حفص بن عمر نے بیان کیا ‘ کہا کہ ہم سے شعبہ نے محمد بن عثمان بن عبداللہ بن موہب سے بیان کیا ہے ‘ ان سے موسیٰ بن طلحہ نے اور ان سے ابوایوب ؓ نے کہ ایک شخص نے نبی کریم ﷺ سے پوچھا کہ آپ مجھے کوئی ایسا عمل بتائیے جو مجھے جنت میں لے جائے ۔ اس پر لوگوں نے کہا کہ آخر یہ کیا چاہتا ہے ۔ لیکن نبی کریم ﷺ نے فرمایا کہ یہ تو بہت اہم ضرورت ہے ۔ (سنو) اللہ کی عبادت کرو اور اس کا کوئی شریک نہ ٹھہراو ۔ نماز قائم کرو ۔ زکوٰۃ دو اور صلہ رحمی کرو ۔ اور بہز نے کہا کہ ہم سے شعبہ نے بیان کیا کہ ہم سے محمد بن عثمان اور ان کے باپ عثمان بن عبداللہ نے بیان کیا کہ ان دونوں صاحبان نے موسیٰ بن طلحہ سے سنا اور انہوں نے ابوایوب سے اور انہوں نے نبی کریم ﷺ سے اسی حدیث کی طرح (سنا) ابوعبداللہ (امام بخاری رحمہ اللہ) نے کہا کہ مجھے ڈر ہے کہ محمد سے روایت غیر محفوظ ہے اور روایت عمرو بن عثمان سے (محفوظ ہے) ۔ ... حدیث متعلقہ ابواب: نماز ، زکوٰۃ اور صلہ رحمی ۔
Terms matched: 4  -  Score: 288  -  4k


Search took 0.569 seconds