کل احادیث 3033 :ترقیم فواد عبدالباقی
 
کل احادیث 7563 :حدیث نمبر
كِتَاب صِفَةِ الْقِيَامَةِ وَالْجَنَّةِ وَالنَّارِ
قیامت اور جنت اور جہنم کے احوال
0

2- باب صِفَّةِ الْقِيَامَةِ وَالْجَنَّةِ وَالنَّارِ
باب: قیامت اور جنت اور دوزخ کا بیان۔
حدیث نمبر: 7051
Tashkeel Show/Hide
وحدثنا ابو بكر بن ابي شيبة،‏‏‏‏ حدثنا ابو اسامة ، عن عمر بن حمزة ، عن سالم بن عبد الله ، اخبرني عبد الله بن عمر ، قال:‏‏‏‏ قال رسول الله صلى الله عليه وسلم:‏‏‏‏ " يطوي الله عز وجل السماوات يوم القيامة، ‏‏‏‏‏‏ثم ياخذهن بيده اليمنى، ‏‏‏‏‏‏ثم يقول:‏‏‏‏ انا الملك اين الجبارون اين المتكبرون، ‏‏‏‏‏‏ثم يطوي الارضين بشماله، ‏‏‏‏‏‏ثم يقول:‏‏‏‏ انا الملك اين الجبارون اين المتكبرون ".وحَدَّثَنَا أَبُو بَكْرِ بْنُ أَبِي شَيْبَةَ،‏‏‏‏ حَدَّثَنَا أَبُو أُسَامَةَ ، عَنْ عُمَرَ بْنِ حَمْزَةَ ، عَنْ سَالِمِ بْنِ عَبْدِ اللَّهِ ، أَخْبَرَنِي عَبْدُ اللَّهِ بْنُ عُمَرَ ، قَالَ:‏‏‏‏ قَالَ رَسُولُ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ:‏‏‏‏ " يَطْوِي اللَّهُ عَزَّ وَجَلَّ السَّمَاوَاتِ يَوْمَ الْقِيَامَةِ، ‏‏‏‏‏‏ثُمَّ يَأْخُذُهُنَّ بِيَدِهِ الْيُمْنَى، ‏‏‏‏‏‏ثُمَّ يَقُولُ:‏‏‏‏ أَنَا الْمَلِكُ أَيْنَ الْجَبَّارُونَ أَيْنَ الْمُتَكَبِّرُونَ، ‏‏‏‏‏‏ثُمَّ يَطْوِي الْأَرَضِينَ بِشِمَالِهِ، ‏‏‏‏‏‏ثُمَّ يَقُولُ:‏‏‏‏ أَنَا الْمَلِكُ أَيْنَ الْجَبَّارُونَ أَيْنَ الْمُتَكَبِّرُونَ ".
سیدنا عبداللہ بن عمر رضی اللہ عنہما سے روایت ہے، رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: اللہ تعالیٰ قیامت کے دن آسمانوں کو لپیٹ لے گا اور ان کو داہنے ہاتھ میں لے لے گا، پھر فرمائے گا میں بادشاہ ہوں، کہاں ہیں زور والے؟ کہاں ہیں غرور کرنے والے؟ پھر بائیں ہاتھ سے زمین کو لپیٹ لے گا (جو داہنے کے مثل ہے اور اسی واسطے دوسری حدیث میں ہے کہ پروردگار کے دونوں ہاتھ داہنے ہیں) پھر فرمائے گا: میں بادشاہ ہوں۔ کہاں ہیں زور والے؟ کہاں ہیں بڑائی کرنے والے؟ .